چیف جسٹس نے پولیس کوراؤ انوار کی گرفتاری سے روک دیا

  • by Admin
  • فروری 13, 2018
  • 0
  • 41  Views
  • 0 Shares

اسلام آباد(بیورورپورٹ)چیف جسٹس ثاقب نثار نے کراچی میں جعلی پولیس مقابلے میں مطلوب سابق ایس ایس پی ملیر راؤ انوار کی حفاظتی ضمانت دیتے ہوئے سپریم کورٹ میں پیش ہونے کاحکم دیا ہے ۔ چیف جسٹس نے یہ بھی حکم دیا ہے کہ راؤ انوار کو گرفتار نہ کیاجائے ۔ سماعت شروع ہوئی توآئی جی سندھ نے بتایا کہ راﺅ انوار کو ڈھونڈنے کےلئے کمیٹی قائم کردی ہے۔۔آئی بی واٹس ایپ لوکیشن ٹریس نہیں کر سکتی۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ تمام باتوں کے مطابق رزلٹ صفر ہے ۔ہر بار وقت دیتے ہیں لگتا ہے عدالت کو ہی راﺅ انوار کو پکڑنا پڑے گا

چیف جسٹس نے راﺅ انوار کا سپریم کورٹ کو لکھا خط آئی جی سندھ کودستخط کی تصدیق کےلئے حوالے کیا۔آئی جی سندھ نے کہا   دستخط تو راﺅ انوار کے ہی لگتے ہیں۔چیف جسٹس نے کہا کہ راﺅ انوار نے خط  میں سپریم کورٹ سے انصاف کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ آزادجے آئی ٹی بنادیں وہ پیش ہوجائینگے۔آئی جی سندھ کاکہنا تھا کہ راﺅ انوار کو صفائی کا موقع ملنا چاہئے۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے یعنی عدالت کامیاب اور آپ ناکام ہوگئے ۔ راﺅ انوار کے خط پر جے آئی ٹی بھی بنا دینگے ۔لیکن پہلے وہ جمعے کو پیش کر تصدیق کریں کہ خط انہی کا ہے۔

عدالت نے پولیس کو راﺅ انوار کی گرفتاری سے روکتے ہوئے کیس کی سماعت 16فروری تک ملتوی کردی۔

Post Tags:

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

*
*