نجم سیٹھی قوم کی آنکھوں میں دھول جھونک رہے ہیں۔۔۔

  • by Admin
  • دسمبر 1, 2017
  • 0
  • 120  Views
  • 0 Shares

تحریر: احمد بلال

 

پاکستان اور بھارت کا مقابلہ کسی بھی میدان میں ہو تو دونوں ملکوں کے شائقین سمیت دنیابھر کی نظر پاک بھارت معرکے پر جم جاتی ہیں۔۔۔اور اگر یہی معرکے کرکٹ کا ہو تو پھر تو لوگ خوب انتظام کرتے ہیں۔۔۔گھروں میں خصوصی طور پر پکوان کا انتظام کیا جاتا ہے ،خاندان کے لوگ اکٹھے ہوتے ہیں اور میچ سے خوب لطف اندوز ہوتے ہیں۔۔۔لیکن ہار کی صورت میں دونوں ملکوں کے شائقین خوب غصے میں نظر آتے ہیں اور غصے کا اظہار دو طریقوں سے کرتے ہیں۔۔۔ایک تو ٹیلی ویژن سیٹ کو لقمہ اجل بنا دیا جاتا ہے یا پھرکرکٹرز کے گھر کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا جاتا ہے۔۔۔

2008کے ممبئی حملوں کے بعد پاکستان اور بھارت کے درمیان دع طرفہ کرکٹ سیریز کا خاتمہ ہو گیا لیکن دونوں بورڈز کی کاوشوں سے ایک سیریز کا انعقاد 2012 میں بھارت میں ہوا۔۔۔ جس میں تین ایک روزہ میچز پر مشتمل سیریز میں پاکستان نے بھارت کو 1-2سے شکست دی تھی جبکہ دو ٹی ٹوینٹی میچز پر مشتمل سیریز 1-1سے برابر ہو گئی تھی۔۔۔

دنیائے کرکٹ میں اٹھنے والے بگ تھری کے مسئلے پر پاکستان نے سابق چئیرمین پی سی بی ذکاء اشرف  کی قیادت میں سخت موقف اپنایا اور بگ تھری کی حمایت سے انکار کردیا ۔۔۔لیکن ذکاء اشرف کے بعد آنے والے اُس وقت کےقائمقام چئیرمین پی سی بی اورپی سی بی کے موجودہ چئیر مین نجم سیٹھی نے بھارتی کرکٹ بورڈ  سے بگ تھری کی حمایت کے لئے دوطرفہ سیریز کھیلنے کا مطالبہ کیا۔۔۔جس کے بعد دونوں کرکٹ بورڈز کے درمیان ایک ایم او یو سائن کیا  گیاجس کے مطابق 2015سے 2023کے دوران دونوں ملکوں کے درمیان 6سیریز کھیلی جائیں گی ۔۔۔جن میں سے 4 کی میزبانی پاکستان کرے گا جبکہ 2بار مہمان نوازی کے فرائض کے بھارت سر انجام دے گا۔۔۔ان 6 سیریز میں مجموعی طور پر 14ٹیسٹ،30ایک روزہ اور12 ٹی ٹوینٹی میچز کا معاہد طے پایا۔۔۔

وقت آنے پر بھارت آنکھیں دکھانے لگا اور کرکٹ سیریز کھیلنے سے انکار کر دیا۔۔۔لیکن اب پی سی بی نے بھارت کے خلاف آئی سی سی رویو کمیٹی میں کیس بھیج دیا جس میں پاکستان نے 70ملین ڈالر کے نقصان کا ازالہ کرنے کا مطالبہ کیا۔۔۔بظاہر یہ کیس فائل کر کے نجم سیٹھی کی جانب سے قوم کی آنکھوں میں دھول جھونکی جارہی ہے۔۔۔پاکستانی سنئیر صحافی آصف خان نے ٹویٹر پیغام میں لکھا ہےکہ انھوں نے بھارتی صحافیوں سے اس معاملے پر بات کی ہے اور ان کے بقول پاکستان کو اس کیس سے کوئی فائدہ نہیں حاصل ہونے والا کیونکہ پی سی بی اور بی سی سی آئی میں جو معاہدہ سائن کیا گیا تھا اس کے مطابق سیریز اس صورت میں کھیلی جائے گی اگر بھارتی حکومت اجازت دے گی ۔۔۔

Post Tags:

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

*
*