ن لیگ ٹوٹنےکےقریب پہنچ گئی؟

  • by Admin
  • نومبر 15, 2017
  • 0
  • 62  Views
  • 0 Shares

 

مسلم لیگ ن کی حکومت دن بدن مشکلات کا شکار ہورہی ہے، سازشی کہانیاں سنانے والے کہتے ہیں کہ ان سب کے پیچھے مریم نواز ہیں ، نوازشریف کا کہنا ہے کہ ہم ت وڈوبے ہیں صنم تم کو بھی لے ڈوبیں گے اس لیے وہ فوج اور عدلیہ سے محاذ آرائی سے پیچھے ہٹنے کو تیار نہیں ۔ اسی وجہ سے ن لیگ کی حکومت میں شامل فصلی بٹیرے ایک بار پھر اڑان بھرنے کو تیار ہورہے ہیں یا تیار کیے جارہے ہیں ۔ کچھ دن پہلے تک 45ایم این ایز کا گروپ کہا جارہا تھا اب سنا ہے کہ یہ تعداد بڑھ رہی ہے یہاں تک کہ رؤوف کلاسرا نے یہ کہہ دیا ہے کہ یہ تعداد بڑھ کر 95 تک پہنچ چکی ہے ۔۔۔92 نیوز کے پروگرام مقابل میں رؤف کلاسرا اور عامر متین نے یہ انکشاف نما خبر دی ہے کہ نوازشریف کی پالیسیوں سے ناراض مسلم لیگ ن میں بڑے فارورڈ بلاک کا انکشاف ہوا ہے ۔ نانئٹی ٹو نیوز کے پروگرام مقابل میں رؤف کلاسرا اور عامر متین نے انکشاف کیا ہے کہ ن لیگ کے 95 ایم این اے پیچھے ہٹ رہے ہیں، نوازشریف کی سزا کاسامنا کرنے والی گفتگو نے اس گروپ کے حوصلے مزید بڑھادیے ۔۔نواز شریف نے احتساب عدالت میں پیشی کے وقت میڈیا گفتگو میں کہا تھا کہ انہیں سزا دلوانے کا پکا فیصلہ کرلیا گیا ہے اور نظر ثانی اپیل کا فیصلہ کوئی عدالتی فیصلہ نہیں بلکہ احتساب عدالت کے جج کے لیے حکم ہے کہ وہ نوازشریف کیخلاف ہی فیصلہ دیں۔ نوازشریف کی اس گفتگو نے بھی ان ارکان کا حوصلہ بڑھا دیا ہے ۔ ان ارکان کا کہنا ہے کہ نوازشریف خود ڈوب رہےہیں لیکن وہ سب کو ساتھ لے کر ڈوبنا چاہتے ہیں ایسا ہرگز نہیں ہونے دیں گے ۔ آج عمران خان نے بھی اسی جانب اشارہ کیا ہے کہ بہت سے لیگی ایم این اے ساتھ چھوڑ رہے ہیں اور الیکشن وقت سے پہلے بھی ہوسکتے ہیں ۔اس کامطلب ہے کہ کچھ تو ہے جس کی پردہ داری ہے اور ن لیگ کی حکومت مشکلات کا شکار نظر آرہی ہے
دوسری طرف جب خبرستان نے اس فاورڈ بلاک میں شامل کچھ ایم ایز سے رابطہ کیا تو انہوں نے نام نہ بتانے کی شرط پر یہ کہا کہ ن لیگ کی پارٹی پالیسیوں پر اختلاف ضرور ہے لیکن اس کوفارورڈ بلاک کہنا ابھی قبل از وقت ہے ۔ انہوں نے اس بات کی بھی تصدیق کی کہ وہ میاں شہبازشریف کی وجہ سے حکومت کے ساتھ کھڑے ہیں اگر وہ کوئی فیصلہ کرتے ہیں تو ہم ان کے ساتھ ہوں گے ۔ان کا کہنا تھا کہ ہماری خواہش ہے کہ پارٹی کی بھاگ ڈور شہباز شریف کے ہاتھ میں دے دی جائے تاکہ پارٹی محاذآرائی سے بچ جائے۔

Post Tags:

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

*
*